تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوزنور21مئی/عراق میں الصادقون سیاسی تحریک کے ایک سرگرم کارکن نے اس بات پر انتباہ کیا ہے کہ ہمارے ملک میں اسلامی جمہوریہ ایران کی مداخلت کا دعوی امریکہ کی ایک سازش ہے۔

نیوزنور21مئی/روس سے تعلق رکھنے والے ایک عیسائی راہب نے کہا ہے کہ  دنیا کے تمام مذہبی رہنماؤں من جملہ ویٹیکن کے پاپ کو چاہئے کہ مقبوضہ فلسطین میں ہونے والے قتل عام پر آواز بلند کریں۔

نیوزنور21مئی/تحریک انصاف پاکستان کے مرکزی رہنما نے کہا ہے کہ فلسطینیوں پر اسرائیلی فوج کی اندھادھند فائرنگ سے ہزاروں افراد کی شہات عالمی برادری کی بے حسی کا منہ بولتا ثبوت اور امن کے علمبردار ممالک، این جی اوز کے منہ پرزوردار تھپڑ ہے۔

نیوزنور21مئی/حزب اللہ لبنان کی مرکزی کونسل کے رکن نے سعودی عرب کی امریکہ اور اسرائیل کے ساتھ ملکر اسلام اور مسلمانوں کے خلاف آشکارا اور پنہاں سازشوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب میں حزب اللہ لبنان کو لبنانی حکومت میں شامل ہونے سے روکنے کی ہمت نہیں ہے۔

نیوزنور21مئی/ملائیشیائی اسلامی تنظیم کی مشاورتی کونسل کے صدر نے کہا ہے کہ فلسطین میں نہتے شہریوں پر صہیونی حکومت کی جانب سے ڈھائے جانے والے مظالم کو روکنا ہو گا۔

  فهرست  
   
     
 
    
تین شعبان امام حسین (ع) کا مکہ معظمہ میں داخلہ

نیوزنور: امام حسین علیہ السلام تین شعبان سے 8 ذیحجہ تک یعنی چار مہینے اور پانچ دن مکہ  معظمہ میں رہے اور اس کے بعد کوفیوں کے بے شمار دعوت نامے حضرت کو موصول ہوے اور اس طرح 8 ذیحجہ سن 60 ھ کو مکہ معظمہ کو چھوڑ کر کوفے کی طرف روانہ ہوے۔

اسلامی بیداری صارفین۳۰۵۴ : // تفصیل

تین شعبان امام حسین (ع) کا مکہ معظمہ میں داخلہ

نیوزنور: امام حسین علیہ السلام تین شعبان سے 8 ذیحجہ تک یعنی چار مہینے اور پانچ دن مکہ  معظمہ میں رہے اور اس کے بعد کوفیوں کے بے شمار دعوت نامے حضرت کو موصول ہوے اور اس طرح 8 ذیحجہ سن 60 ھ کو مکہ معظمہ کو چھوڑ کر کوفے کی طرف روانہ ہوے۔

عالمی اردو خبررساں ادارہ نیوزنور؛رسولخدا صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے تیسرے وصی حضرت امام حسین علیہ السلام عامل مدینہ کی طرف سے یزید بن معاویہ کی بیعت کرنے کی درخواست کو ٹھکراتے ہوے اعتراض کے ساتھ شھر مدینہ سے مکہ کی طرف ہجرت کی اور شب جمعہ تین شعبان سن 60 ھ کو مکہ معظمہ میں داخل ہوے اور داخل ہوتے ہوے یہ آیت تلاوت کر رہے تھے : و لَمّا تَوَجّهَ تِلْقاءَ مَدْيَن قالَ عَسي رَبّي اَنْ يَهْدِيَني سَواءَ السَّبيل.(1)

امام حسین (علیہ السلام) نے 28 رجب کو مدینہ منورہ سے ہجرت کی اورپانچ دن کی مسافرت کے بعد 3 شعبان کو مکہ مکرمہ میں داخل ہوے ۔

جب شھر میں داخل ہوے شھر مقدس کے لوگ ان کے استقبال کیلۓ دوڑ پڑے ۔ مکہ کی بزرگ بااثر شخصیتیں اور عمومی لوگ اور ‌زائرین ہر دن امام حسین علیہ السلام  کی خدمت میں حاضر ہوکر ان سے فیضیاب ہوتے تھے ۔

عبد اللہ بن زبیر جو کہ امام حسین علیہ السلام سے  ایک دن پہلے مدینہ سے مکہ کی طرف باگ نکل کر اس مقدس مقام میں پناہ حاصل کی تھی اور اس کی چاہت یہی تھی کہ مکہ کے لوگ یزید بن معاویہ کے خلاف جنگ کرنے میں اسکا ساتھ دیں تاکہ وہ حکومت قائم  کر سکے ۔ مگر امام حسین (علیہ السلام) کی مکہ میں تشریف آوری سے اکثر لوگوں نے امام حسین (علیہ السلام) کےساتھ  روابط قائم کۓ اور ان کی خواہش اور مقصد سے خبردار ہوے اور عبداللہ بن زبیر کی طرف اعتناکر ناچھوڑدیا اور اسطرح عبداللہ بن زبیر امام حسین (علیہ السلام) کے مکہ معظمہ آنے سے خوش نہیں تھا اور وہ چاہتا تھا کہ امام حسین علیہ السلام کسی بھی طرح مکہ معظمہ چھوڑکر کسی اور جگہ چلا جاۓ اور اسکے لۓ راستہ ہموار رہے ۔ امام حسین (علیہ السلام) نے عبد اللہ بن زبیر کی جاہ طلبی اور یزید کے عاملوں کی پروا کۓ بغیر مکہ کے لوگوں کیلۓ حقایق بیان کرتے رہے ۔

امام حسین علیہ السلام تین شعبان سے 8 ذیحجہ تک یعنی چار مہینے اور پانچ دن مکہ  معظمہ میں رہے اور اس کے بعد کوفیوں کے بے شمار دعوت نامے حضرت کو موصول ہوے اور اس طرح 8 ذیحجہ سن 60 ھ کو مکہ معظمہ کو چھوڑ کر کوفے کی طرف روانہ ہوے۔(2)

حوالہ:

·         1۔ سورہ قصص، آیہ 22

·         2۔ الارشاد (شیخ میفید)، ص 373؛کلمات امام حسین (ع) شریفی، ص 305؛ لوعج الاشجان (سید محسن امین)، ص 32؛ منتھی الامال (شیخ عباس قمی)ج1 ص 301؛ مناقب آل ابی طالب (ابن شھر آشوب) ج3،ص240


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر