تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوز نور :17 نومبر/ میانمار فوج کے سربراہ نے کہاہے کہ بدھ مت کے پیروکاروں کے راضی ہونے تک بنگلادیش ہجرت کر جانے والے روہنگیا مسلمان واپس نہیں آسکتے، روہنگیائی افراد کی اپنے گھروں کی واپسی میانمار کے حقیقی باشندوں کی رضامندی سے ہوگی اور اس مقصدکے لیے سب سے پہلے بدھ پرستوں کو راضی کرنا پڑے گا ۔

نیوز نور :17 نومبر/ عراقی فوج اور سیکورٹی فورس نے مغربی صوبے الانبار کے شہر راوہ کو بھی تکفیری دہشت گرد گروہ داعش کے قبضے سے آزاد کرا لیاہے۔

نیوز نور :17 نومبر/ ترکی کے صدر نے مغربی ممالک پر شامی کردوں کی حمایت پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ جن ممالک نے داعش کو تشکیل دیا تھا وہی آج شام کے کردوں کو مسلح کررہے ہیں۔

نیوز نور :17 نومبر/ تہران کےخطیب جمعہ نے خطے کے حساس شرائط کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاہےکہ  مسلمانوں کو باہمی اتحاد اور یکجہتی کے ساتھ دشمنوں کے منصوبوں کو ناکام بنانا چاہیے۔

نیوز نور :17 نومبر/ جرمن وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ یورپی ممالک سعودی اقدامات اور مہم جوئی پر کسی بھی صورت میں خاموش نہیں رہیں گے۔

  فهرست  
   
     
 
    
سعودی عرب کے بادشاہ کے بیٹے نے پچھلے مہینے وعدہ کیا تھا کہ وہ جنگ کو ایران کے اندر منتقل کرے گا /
سعودی عرب کے وزیر خارجہ نے تہران پر دہشت گردانہ حملوں سے ایک دن پہلے کیا کہا تھا ؟

نیوزنور:سعودی عرب کے وزیر خارجہ نے تہران پر دہشت گردانہ حملوں سے ایک دن پہلے ، دھمکی دی تھی کہ ایران کو اس چیز کی بنا پر کہ جسے وہ علاقے کے امور میں ایران کی مداخلت کہتا ہے سزا ملنی چاہیے ۔

استکباری دنیا صارفین۱۱۳۳ : // تفصیل

سعودی عرب کے بادشاہ کے بیٹے نے پچھلے مہینے وعدہ کیا تھا کہ وہ جنگ کو ایران کے اندر منتقل کرے گا /

سعودی عرب کے وزیر خارجہ نے تہران پر دہشت گردانہ حملوں سے ایک دن پہلے کیا کہا تھا ؟

نیوزنور:سعودی عرب کے وزیر خارجہ نے تہران پر دہشت گردانہ حملوں سے ایک دن پہلے ، دھمکی دی تھی کہ ایران کو اس چیز کی بنا پر کہ جسے وہ علاقے کے امور میں ایران کی مداخلت کہتا ہے سزا ملنی چاہیے ۔

عالمی اردو خبررساں ادارے نیوزنور کی رپورٹ کے مطابق سعودی عرب کے وزیر خارجہ عادل الجبیر نے 7جون منگلوار کے دن تہران پر دہشت گردانہ حملے سے ایک دن پہلے پیرس میں نامہ نگاروں کے مجمعے میں ایران کو دھمکی دی تھی ۔

العربیہ چینل کے اعلان کے مطابق اس نے داعش اور دوسرے دہشت گرد گروہوں  کی حمایت جو ریاض کرتا ہے اس کے ثبوتوں کو نظر انداز کرتے ہوئے (جیسا کہ امریکہ کے وزیر خارجہ کے سال ۲۰۰۹ کے اس اعتراف کو بھولنے کی ایکٹینگ کرتے ہوئے کہ سعودی عرب دہشت گردوں کا حامی ہے ) یہ دعوی کیا کہ ایران دنیا میں دہشت گردوں کا پہلے نمبر کا حامی ہے اور اپنے ہمسایہ ملک کے امور میں بھی مداخلت کرتا ہے اور علاقے میں شدت پسند گروہوں کی حمایت کرتا ہے ۔ اسی طرح یہ ملک القاعدہ کے سربراہوں اور دوسرے دہشت گرد گروہوں کے سرغنوں کا میزبان ہے اور ایران نے جو پالیسی اپنا رکھی ہے وہ بھی ہماری نظر میں بالکل قابل قبول نہیں ہے ۔

حالانکہ سب سے زیادہ دہشت گرد جو شام اور عراق میں ہیں وہ سعودی عرب کے باشندے ہیں ، الجبیر نے مزید کہا : ۳۷ سال کے دوران اس نے ۱۲ سفارتخانوں پر حملہ کیا ہے اور بمب اور دھماکہ خیز مواد بنانے میں اس کا دنیا میں پہلا نمبر ہے کہ جس کی وجہ سے آج تک ہزاروں افراد قتل ہو چکے ہیں ۔ ایران نے ۹۰ فیصد دھماکہ خیز مواد بنایا ہے اور اسے دہشت گردوں میں تقسیم کیا ہے ۔

اس نے ایران پر الزامات کی بوچھاڑ کرتے ہوئے کہا : تہران علاقے کے حوادث اور ان کے نتائج کا ذمہ دار ہے ۔ ایران وہ ملک ہے جو سیاستمداروں کو قتل کرنے کے منصوبے بناتا ہے اور بین الاقوامی حقوق کو نظر انداز کرتا ہے اور ان کے مفادات کو پایمال کرتا ہے ۔ ایران کو بین الاقوامی حقوق کا احترام کرنا چاہیے تا کہ وہ ایک معمول کی حکومت کہلائے ۔ اس ملک کو علاقے کے امور میں مداخلت اور دہشت گرد گروہوں اور شدت پسندوں کی حمایت کرنے کے جرم میں سزا ملنی چاہیے ۔

بن سلمان کی دھمکی ،

محمد بن سلمان سعودی عرب کے ولی عہد کے جانشین نے بھی گذشتہ ۱۲ اردیبہشت کو ایک پریس کانفرنس میں دعوی کیا تھا کہ اس کا ملک ایران کے نشانے پر ہے ، اور تہران مکہ تک پہنچنے کا ارادہ رکھتا ہے ۔ لہذا سعودی عرب انتظار نہیں کرے گا کہ جنگ اس کے ملک کے اندر ہو بلکہ اس کو ایران میں منتقل کرے گا ۔

بن سلمان نے کہا : ہم جانتے ہیں کہ ہم ایران کی حکومت کا اصلی نشانہ ہیں ۔ مسلمانوں کے قبلے تک پہنچنا اس حکومت کا اصلی مقصد ہے ہم منتظر نہیں رہیں گے کہ جنگ سعودی عرب میں ہو بلکہ کوشش کریں گے کہ جنگ خود ان کے پاس ایران میں ہو سعودی عرب میں نہیں ۔

آج صبح چار دہشت گرد مراجعہ کرنے والوں کے بھیس میں پارلیمنٹ کے اندر جانے والی راہرو میں داخل ہوئے اور پارلیمنٹ کی حفاظتی پولیس کی طرف انہوں نے گولیاں چلائیں اور ان میں سے ایک کو شہید اور آٹھ کو زخمی کر دیا جن میں حفاظت اور مراجعہ کرنے والے دونوں شامل تھے ۔

کچھ اور دہشت گرد حرم امام خمینی رہ میں داخل ہوئے اور انہوں نے گولیاں چلا کر چند افراد کو زخمی کر دیا دو دہشت گردوں نے حرم کے احاطے میں خود کو دھماکے سے اڑا دیا۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر