تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوز نور :معروف پاکستانی اہلسنت عالم دین اورچیئرمین تحریک لبیک یارسول اللہ (ص)نےلاہور میں سالانہ فکر امام حسینؑ کانفرنس سے خطاب کے دوران حضرت امام حسینؑ کی قربانی کو قیامت تک اہل اسلام کیلئے مشعل راہ قرار دہتے ہوئے کہا ہے کہ آپؑ کے سیرت و کردار سے اُمت مسلمہ کے قلوب قیامت تک منور ہوتے رہیں گے۔

نیوز نور : امریکہ میں قائم عالمی اسلامی مرکز کے سربراہ نے کہا ہے کہ جوہری معاہدے پر ٹرمپ کے حالیہ بیانات پر تنقید کرتے ہوئے اس سمجھوتے کو عالمی امن کی مزید مضبوطی کا باعث قرار دیتے ہوئے کہا کہ میں ایک امریکی شہری کی حیثیت سے اپنے صدر سے بالکل مایوس ہوچکا ہوں

نیوز نور : اسلامی جمہوریہ ایران کے ایک ممتاز شیعہ عالم دین اور حوزہ علمیہ کےاستاد نے نمازکو بحرانوں کی مینجمنٹ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ عاشورا کا ایک اہم پیغام اورعاشورائی طرززندگی کی ایک اہم صفت نمازکو اول وقت پڑھنا ہے۔

نیوز نور : لبنان کے صدر نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی جانب سے لبنان کے اندرونی معاملات میں کوئی مداخلت نہیں اور اس مسئلے کا دعوی کرنے والے اپنے دعوے کے حوالے سے ثبوت بھی پیش نہیں کرسکتے۔

نیوز نور : پاکستان کے نامور اہلسنت عالم دین اور سنی تحریک کے سربراہ نے کہا ہے کہ امام عالمی مقام حضرت امام حسین علیہ السلام نے ظالم و جابر کے سامنے ڈٹ جانے اور مظلوموں کیلئے آواز بلند کرنے کا درس دیا۔

  فهرست  
   
     
 
    
علاقائی امور کے ایرانی ماہر:
مسلمانوں سے عرب حکومتوں کی غداری اورصیہونی حکومت کےساتھ ان کا گٹھ جوڑ فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے

نیوز نور:علاقائی امو رکے ایک ایرانی ماہر نے کہاہےکہ مسلمانوں سے عرب حکومتوں کی غداری اورصیہونی حکومت کےساتھ ان کا گٹھ جوڑ فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔

استکباری دنیا صارفین۲۴۱ : // تفصیل

علاقائی امور کے ایرانی ماہر:

مسلمانوں سے عرب حکومتوں کی غداری اورصیہونی حکومت کےساتھ ان کا گٹھ جوڑ فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے

نیوز نور:علاقائی امو رکے ایک ایرانی ماہر نے کہاہےکہ مسلمانوں سے عرب حکومتوں کی غداری اورصیہونی حکومت کےساتھ ان کا گٹھ جوڑ فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔

عالمی اردوخبررساں ادارے’’نیوز نور‘‘کی رپورٹ کے مطابق مقامی میڈیا کےساتھ انٹرویو میں ’’مہدی عزیز ‘‘نےمتحدہ عرب امارات کے ایران مخالف اقدامات اورایران میں اماراتی سفیر کے صوتی  ایمیلز کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاکہ بحرین اورمتحدہ عرب امارات جیسی رجعتی حکومتیں آل سعود اورآل یہود کو جوڑنے میں ایک پل کاکردار اداکررہی ہے۔

انہوں نے متحدہ عرب امارات اورغاصب صیہونی رژیم کے درمیان تعلقات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاکہ اسرائیلی کمپنیاں متحدہ عرب امارات میں بھاری سرمایہ لگا چکی ہیں اوروہ متحدہ عرب امارات کو سیکورٹی سازوسامان  فراہم کرتی ہیں۔

انہوں نے کہاکہ متحدہ عرب امارات جیسی رجعتی حکومت کی خطے میں کوئی مقبولیت نہیں ہے اس لئےاس کا انحصار  بیرونی ممالک پر ہے۔

انہوں نے کہا کہ خلیج فارس کی رجعتی حکومتیں کو  اپنی بقاء کیلئے امریکہ اوراسرائیل پر انحصار کرنا پڑھ رہاہے۔

ایرانی تجزیہ نگار نے کہاکہ  علاقائی رجعتی حکومتوں کا اسرائیل اورامریکہ پر انحصار فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ کے طورپر ابھری ہیں۔

قطر اورسعودی عرب کے درمیان  تنازعے سے متعلق پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں ایرانی ماہر نے کہاکہ عرب ریاستوں کا قطر کےساتھ تعلقات منقطع کرنے سے اس بات کی نشاندہی ہوتی ہےکہ یہ ممالک سعودی عرب پر منحصر ہیں ۔

عزیز نے کہاکہ قطر اورخلیجی ریاستوں کے درمیان جاری کشیدگی کو سنجیدگی سے لینے کی ضرورت نہیں ہے کیونکہ یہ ریاستیں ممکنہ طورپر دوبارہ ایک دوسرے کےساتھ کھڑی ہونگی جو ماضی میں بھی دیکھنے میں آیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ متحدہ عرب امارات سعودی عرب اوراسرائیل کو جوڑنے کیلئے ایک پل کی مانند کام کررہاہے اوریہ تینوں ممالک قطر کو ایران سے دور کرنے کیلئے دوحہ پر دباؤ ڈال رہے ہیں۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر