تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوز نور 23 اپریل/ بحرین کے ایک ممتاز شیعہ عالم دین نے اس بات کےساتھ کہ آل خلیفہ  رژیم کےسامنے فلسطینی کاز کی کوئی اہمیت نہیں ہے کہا ہے کہ بحرینی عوام  اپنے تمام جائز مطالبات پورے ہونے تک اپنی تحریک جاری رکھیں گے۔

نیوزنور23اپریل/روسی وزارت خارجہ کی ترجمان نے کہا ہے کہ مغربی ممالک شام کے شہر دوما میں کیمیائی حملے سے متعلق حقائق میں تحریف کر رہے ہیں۔

نیوزنور23اپریل/ٹوئٹر پرسعودی عرب کے  سرگرم  اور شاہی خاندان کے قریبی کارکن نےسعودی عرب کے دارالحکومت ریاض میں شاہی محل میں کل رات ہونے والی فائرنگ کی اصل حقیقت سامنے لاتے ہوئے کہا ہے کہ فائرنگ کے واقعہ میں آل سعود کے بعض اعلٰی شہزادے ملوث ہیں ڈرون کو گرانے کا واقعہ سعودی حکومت کا ڈرامہ ہے فائرنگ کے واقعہ کے بعد سعودی بادشاہ اور ولیعہد شاہی محل سے فرار ہوگئے تھے۔

نیوزنور23اپریل/اسلامی مقاومتی محورحزب اللہ لبنان کے سربراہ نے کہا ہےکہ اسرائيل کو لبنانیوں کے خلاف جارحیت سے روکنا ہمارا سب سے بڑا ہدف ہے ۔

نیوزنور23اپریل/مجلس وحدت مسلمین پاکستان سندھ کے سیکرٹری جنرل نے کہا  ہے کہ امام حسینؑ نے ۱۴ سو سال قبل ان دہشتگردوں کو شکست دی جو دین اسلام کا لبادہ اوڑھ کر دین کو اپنی پسند نا پسند میں ڈھال رہے تھے۔

  فهرست  
   
     
 
    
علاقائی امور کے ایرانی ماہر:
مسلمانوں سے عرب حکومتوں کی غداری اورصیہونی حکومت کےساتھ ان کا گٹھ جوڑ فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے

نیوز نور:علاقائی امو رکے ایک ایرانی ماہر نے کہاہےکہ مسلمانوں سے عرب حکومتوں کی غداری اورصیہونی حکومت کےساتھ ان کا گٹھ جوڑ فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔

استکباری دنیا صارفین۳۱۱ : // تفصیل

علاقائی امور کے ایرانی ماہر:

مسلمانوں سے عرب حکومتوں کی غداری اورصیہونی حکومت کےساتھ ان کا گٹھ جوڑ فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے

نیوز نور:علاقائی امو رکے ایک ایرانی ماہر نے کہاہےکہ مسلمانوں سے عرب حکومتوں کی غداری اورصیہونی حکومت کےساتھ ان کا گٹھ جوڑ فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ ہے۔

عالمی اردوخبررساں ادارے’’نیوز نور‘‘کی رپورٹ کے مطابق مقامی میڈیا کےساتھ انٹرویو میں ’’مہدی عزیز ‘‘نےمتحدہ عرب امارات کے ایران مخالف اقدامات اورایران میں اماراتی سفیر کے صوتی  ایمیلز کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاکہ بحرین اورمتحدہ عرب امارات جیسی رجعتی حکومتیں آل سعود اورآل یہود کو جوڑنے میں ایک پل کاکردار اداکررہی ہے۔

انہوں نے متحدہ عرب امارات اورغاصب صیہونی رژیم کے درمیان تعلقات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاکہ اسرائیلی کمپنیاں متحدہ عرب امارات میں بھاری سرمایہ لگا چکی ہیں اوروہ متحدہ عرب امارات کو سیکورٹی سازوسامان  فراہم کرتی ہیں۔

انہوں نے کہاکہ متحدہ عرب امارات جیسی رجعتی حکومت کی خطے میں کوئی مقبولیت نہیں ہے اس لئےاس کا انحصار  بیرونی ممالک پر ہے۔

انہوں نے کہا کہ خلیج فارس کی رجعتی حکومتیں کو  اپنی بقاء کیلئے امریکہ اوراسرائیل پر انحصار کرنا پڑھ رہاہے۔

ایرانی تجزیہ نگار نے کہاکہ  علاقائی رجعتی حکومتوں کا اسرائیل اورامریکہ پر انحصار فلسطین کی آزادی میں سب سے بڑی رکاوٹ کے طورپر ابھری ہیں۔

قطر اورسعودی عرب کے درمیان  تنازعے سے متعلق پوچھے گئے ایک سوال کے جواب میں ایرانی ماہر نے کہاکہ عرب ریاستوں کا قطر کےساتھ تعلقات منقطع کرنے سے اس بات کی نشاندہی ہوتی ہےکہ یہ ممالک سعودی عرب پر منحصر ہیں ۔

عزیز نے کہاکہ قطر اورخلیجی ریاستوں کے درمیان جاری کشیدگی کو سنجیدگی سے لینے کی ضرورت نہیں ہے کیونکہ یہ ریاستیں ممکنہ طورپر دوبارہ ایک دوسرے کےساتھ کھڑی ہونگی جو ماضی میں بھی دیکھنے میں آیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ متحدہ عرب امارات سعودی عرب اوراسرائیل کو جوڑنے کیلئے ایک پل کی مانند کام کررہاہے اوریہ تینوں ممالک قطر کو ایران سے دور کرنے کیلئے دوحہ پر دباؤ ڈال رہے ہیں۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر