تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوزنور:ایرانی صدر کے معاون نے کہا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی عالمی سطح پر غیر مہذبانہ رفتار امریکہ کے لئے شرم آور ہے جو دنیا میں سپر پاور ہونے کا مدعی ہے سعودی عرب ام الفساد اور دہشت گردی کے فروغ کا اصلی مرکز ہے جسے امریکی سرپرستی حاصل ہے۔

نیوزنور:روس کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ امریکی سربراہی والا اتحاد دہشت گرد گروہ جبھۃ النصرہ کو بچانے کی کوشش کر رہا ہے۔

نیوزنور:بحرین کی تنظیم برائے انسانی حقوق کے صدر نے کہا ہے کہ آل خلیفہ کے ظلم وستم اور اوچھے ہتھکنڈوں کے باوجود بحرین میں انسانی حقوق کا کام بند نہیں کریں گے۔

نیوزنور:ایک امریکی روزنامے نے لکھا ہے کہ وائٹ ہاوس ایران پر حملہ کرنے کا بہانہ تلاش رہا ہے حالانکہ ٹرمپ کو ایرانی تاریخ سے عبرت حاصل کرنا چاہئے۔

نیوزنور:فلپائن کے صدرنے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جانب سے امریکا کے دورے کی دعوت مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ کبھی بھی امریکا نہیں جائیں گے۔

  فهرست  
   
     
 
    
معروف اطالوی تجزیہ کار:
تہران حملوں میں یقینی طورپر آل سعود کے ہاتھ کارفرما ہیں

نیوز نور:ایک اطالوی سیاسی مبصر نے  تہران حملوں کہ جس کی  ذمہ داری تکفیری دہشتگرد گروہ داعش نے قبول کی میں سعودی عرب کے کردار پر روشنی ڈالتے ہوئے کہاہےکہ ان واقعات میں یقینی طورپر سعودی عرب ملوث تھا۔

استکباری دنیا صارفین۲۰۵ : // تفصیل

معروف اطالوی تجزیہ کار:

تہران حملوں میں یقینی طورپر آل سعود کے ہاتھ کارفرما ہیں

نیوز نور:ایک اطالوی سیاسی مبصر نے  تہران حملوں کہ جس کی  ذمہ داری تکفیری دہشتگرد گروہ داعش نے قبول کی میں سعودی عرب کے کردار پر روشنی ڈالتے ہوئے کہاہےکہ ان واقعات میں یقینی طورپر سعودی عرب ملوث تھا۔

عالمی اردوخبررساں ادارے’’نیوز نور‘‘کی رپورٹ کے مطابق ایرانی ذرائع ابلاغ کےساتھ انٹرویو میں ’’ہیڈرکو پیراسنی ‘‘نے  تہران حملوں کہ جس کی  ذمہ داری تکفیری دہشتگرد گروہ داعش نے قبول کی میں سعودی عرب کے کردار پر روشنی ڈالتے ہوئے کہاکہ ان واقعات میں یقینی طورپر سعودی عرب ملوث تھا۔

انہوں نے کہاکہ میر اپختہ عقیدہ ہےکہ سعودی عرب  ان حملوں  میں ملوث تھا اورسعودی عرب کے وزیر دفاع محمد بن سلمان شاید چاہتے تھے کہ  اسلامی جمہوریہ ایران کو بشارالاسد اوردہشتگردی کے خلاف جنگ میں شامی فوج کی حمایت کرنے کی قیمت ادا کرنی چاہئے۔

انہوں نے کہاکہ تکفیری دہشتگرد گروہ داعش کو  براہ راست  یا بلواسطہ طورپر لاجسٹک حمایت کے ذریعے آل سعود کنٹرول کرتی ہے۔

 انہوں نے کہاکہ  سعودی عرب اورریاض کے درمیان گٹھ جوڑ شام میں پہلے ہی واضح ہوچکا ہے۔

انہوں نے سعودی عرب اورقطر کے درمیان بڑھتی کشیدگی کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاکہ سعودی عرب کو اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ خوشگوار تعلقات قائم کرنے کی سزادی جارہی ہے۔

انہوں نے کہاکہ  آل سعود خاندان نے ہمیشہ جیو پولٹیکل مقاصد کے حصولی کیلئے دہشتگردی کا استعمال کیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ دہشتگرد ی کے تئیں آل سعود حکومت کا دوہرا میعار شرمناک اورمنافقانہ ہے سعودی تانا شاہ  ایک طرف  دہشتگردی کے خلاف جنگ وسیع کرنے کا دعویٰ کرتا ہے اور دوسری طرف شام میں تکفیری دہشتگردوں کو اسپانسر کررہا ہے۔

انہوں نے کہاکہ ایسا صرف  آل سعود کے  یورپی اورامریکی اتحادیوں کی بدولت ہی ممکن ہوسکا ہے کیونکہ دہشتگردوں کی مالی واسلحہ جاتی حمایت کرنے پر آل سعود کے خلاف اقدامات اُٹھانے کے بجائے  وہ اس جابر حکومت کو اربوں ڈالر کے ہتھیار فراہم کررہے ہیں۔

قابل ذکر ہےکہ تہران میں بدھ کےروز ایرانی پارلیمنٹ اورحضرت امام خمینیؒ حرم کے احاطے میں دہشتگردوں کے وحشیانہ حملوں کے نتیجے میں مجموعی طورپر 17 افراد شہید اورپچاس سے زائد افراد زخمی ہوئے تھے۔

ادھر اسلامی جمہوریہ ایران کے وزیر انٹلی جنس نے ایک بیان میں کہاہےکہ تہران میں حالیہ دہشتگردانہ حملوں کے ماسٹر مائنڈ کو ا نٹلی جنس اہلکاروں نے موت کے گھاٹ اُتار دیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ انٹلی جنس اہلکاروں نے جن 42 دہشتگردوں کو گرفتار کیا ہے ان میں سے اکثر  نےتہران میں ہونے والے دہشتگردانہ حملوں میں  کردارادا کیا ہے۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر