تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوز نور :17 نومبر/ میانمار فوج کے سربراہ نے کہاہے کہ بدھ مت کے پیروکاروں کے راضی ہونے تک بنگلادیش ہجرت کر جانے والے روہنگیا مسلمان واپس نہیں آسکتے، روہنگیائی افراد کی اپنے گھروں کی واپسی میانمار کے حقیقی باشندوں کی رضامندی سے ہوگی اور اس مقصدکے لیے سب سے پہلے بدھ پرستوں کو راضی کرنا پڑے گا ۔

نیوز نور :17 نومبر/ عراقی فوج اور سیکورٹی فورس نے مغربی صوبے الانبار کے شہر راوہ کو بھی تکفیری دہشت گرد گروہ داعش کے قبضے سے آزاد کرا لیاہے۔

نیوز نور :17 نومبر/ ترکی کے صدر نے مغربی ممالک پر شامی کردوں کی حمایت پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ جن ممالک نے داعش کو تشکیل دیا تھا وہی آج شام کے کردوں کو مسلح کررہے ہیں۔

نیوز نور :17 نومبر/ تہران کےخطیب جمعہ نے خطے کے حساس شرائط کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاہےکہ  مسلمانوں کو باہمی اتحاد اور یکجہتی کے ساتھ دشمنوں کے منصوبوں کو ناکام بنانا چاہیے۔

نیوز نور :17 نومبر/ جرمن وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ یورپی ممالک سعودی اقدامات اور مہم جوئی پر کسی بھی صورت میں خاموش نہیں رہیں گے۔

  فهرست  
   
     
 
    
ترک صدر :
ایران کے بغیر علاقائی بحرانوں کا حل ناممکن ہے

نیوز نور : ترکی کے صدر  نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران مشرق وسطی کا ایک اہم ملک ہے جس کے بغیر علاقائی بحرانوں کا حل ناممکن ہے۔

مسلکی رواداری صارفین۴۰۴ : // تفصیل

ترک صدر :

ایران کے بغیر علاقائی بحرانوں کا حل ناممکن ہے

نیوز نور : ترکی کے صدر  نے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران مشرق وسطی کا ایک اہم ملک ہے جس کے بغیر علاقائی بحرانوں کا حل ناممکن ہے۔

عالمی اردو خبرر ساں ادارے ’’نیوز نور‘‘ کی رپورٹ کے مطابق ترک صدر ’’رجب طیب اردوغان‘‘ نے پرتگالی ٹی وی چینل ’آر۔ٹی۔پی‘ کے ساتھ  انٹرویو میں کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے بغیر علاقائی بحرانوں کا حل ناممکن ہے۔

انہوں نے ایران اور ترکی کے درمیان بعض مسائل پر اختلافات کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ ہم سمجھتے ہیں کہ ہمیں مل بیٹھ کر مذاکرات کرنے ہوں گے کہ کس طرح شام، عراق، اور قطر کے مسائل کو حل کرنا ہے۔

انہوں نے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کے بغیر خطے کے تنازعات بشمول عراق اور شام کے بحران کو حل نہیں کیا جاسکتا۔

ترک صدرنے کہا کہ ہم نےشامی تنازعات کے حل کے لیے ایران کے ساتھ آستانہ مذاکرات  کہ جس میں امریکی سفیر بھی شریک تھے شرکت کی اور شامی بحران کے حل کے لیے اس امن مذاکرات کا سلسلہ اعلٰی سطح پر اب بھی جاری ہے۔

رجب طیب اردوغان نے مزید کہا کہ شامی بحران کا حل علاقائی بحرانوں کو حل کرنے میں اہم قدم ہے اور ہم چاہتے ہیں کہ امریکہ اور سعودی عرب بھی شامی مسائل کے حل کے لیے ایران،ترکی اور روس کے منصوبے سے منسلک ہوکر  اس میں  تعاون کریں۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر