تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوز نور:1932 ء میں سعودی عرب کے قیام کے بعد سے آل سعود نے بادشاہت کے متضاد سیاسی ،سماجی اورمذہبی ڈھانچے کے چلینجز سے نمٹنے کیلئے وہابیت کا استعمال کیا ہے اوروہابیت کے نظرئے نے مذہبی طورپر آل سعود خاندان کی طاقت تاج اورحکومت کو جائز ٹھہرایا ہے۔

نیوز نور : بولویا کے وزیر خارجہ نے کہا ہے کہ امریکہ کو وینزوئلا میں مداخلت کا خیال ترک کرنا چاہئے کیونکہ دنیا بھر میں امریکی سامراجیت دم توڑ چکی ہے۔

نیوز نور:ایران کے ایک سینئر قانون ساز نے کہاہےکہ امریکہ کی طرف سے روس اورایران پر  بیک وقت پابندیوں کو عائد کئے جانے کا مقصد دوعلاقائی اتحادیوں کے درمیان تعلقات میں شگاف پیدا کرنا تھا۔

نیوز نور:لبنان کی اسلامی تحریک مقاومت حزب اللہ کی سیکورٹی کونسل کےچیئرمین نے کہاہے کہ شام میں سرگرم تکفیری دہشتگرد گروہ داعش کے خلاف جنگ آخری مرحلے میں داخل ہوچکی ہے۔

نیوز نور : لبنان کے پارلیمانی نمائندے نے کہا ہے کہ  شام فلسطین اور بیت المقدس کی حمایت کا علمبردار ہے۔

  فهرست  
   
     
 
    
امریکی تجزیہ کار:
نئی امریکی پابندیوں کے بعد ایران جوہری معاہدے پر خطرے کےبادل منڈلارہےہیں

نیوز نور:امریکہ کے ایک تجزیہ کار نے کہاہےکہ ایران پر نئی امریکی پابندیوں کے بعد تاریخی جوہری معاہدے پر خطرے کےبادل منڈلارہے ہیں۔

استکباری دنیا صارفین۴۴۱ : // تفصیل

امریکی تجزیہ کار:

نئی امریکی پابندیوں کے بعد ایران جوہری معاہدے پر خطرے کےبادل منڈلارہےہیں

نیوز نور:امریکہ کے ایک تجزیہ کار نے کہاہےکہ ایران پر نئی امریکی پابندیوں کے بعد تاریخی جوہری معاہدے پر خطرے کےبادل منڈلارہے ہیں۔

عالمی اردوخبررساں ادارے ’’نیوزنور‘‘کی رپورٹ کے مطابق  امریکی تجزیہ کار ’’کاویہ افراسائبی‘‘نے روسیا الیوم کےساتھ انٹرویو میں واشنگٹن ڈی سی میں اسرائیلی لابی کے دباؤمیں آکر ٹرمپ انتظامیہ کی طرف سے ایران پر نئی پابندیاں عائد کرنے اورتاریخی جوہری معاہدے کو سبوتاژ کرنے کے اقدامات پرتبصرہ کرتے ہوئے کہاکہ ایران نئی امریکی پابندیوں کا ہدف بن گیا ہے اوران پابندیوں سے جوہری معاہدہ خطرے میں پڑ گیا ہے۔

انہوں نے اس سوال کہ کیا امریکی پابندیوں سے جوہری معاہدہ واقعی خطرے میں ہے کے جواب میں  کہاکہ ان پابندیوں سے امریکہ نے جوہری معاہدہ مخالف اقدامات اُٹھا کر اس معاہدے کو سبوتاژ کرنے کی راہ ہموار کردی ہے۔

انہوں نے کہاکہ بدقسمتی سے ٹرمپ انتظامیہ کی طرف سے جوہری معاہدے کے تئیں ایرانی مؤقف کے معائنے کے باوجود انہوں نے ایسے غیر سنجیدہ اقدامات اُٹھائےہیں جسے مشترکہ جامع منصوبہ خطرے میں پڑگیا ہے۔

انہوں نے ایرانی نائب وزیر خارجہ عباس عراقچی کے اس بیان کہ  یورپی یونین امریکہ کو جوہری معاہدے کو سبوتاژ کرنے کی ہرگز اجازت نہیں دےگی پر تبصرہ کرتے ہوئے کہاکہ یورپی یونین جامع مشترکہ ایکشن پلان  پر دستخط کرکے اقتصادی فوائد کو تشکیل دے رہے ہیں اورامریکہ کہ جس نے اپنے کمپنیوں  کو اس ایٹمی معاہدے کے فوائد حاصل کرنے سےروکا ہے کے مقابلے میں فرانس ،اٹلی اوردوسرے کئی ممالک ایران کے ساتھ کاروبار کے خواہاں ہیں۔

انہوں نے کہاکہ دنیا کے دیگر ممالک نے ٹرمپ انتظامیہ کے اقدامات پر عمل نہیں کیا ہے کیونکہ ایران کا جوہری پروگرام پرامن ہے اوراقوام متحدہ کے کسی بھی قرارداد کی خلاف ورزی نہیں ہے لہذا یورپی یونین ٹرمپ کی پیروی کرنے میں ہچکچا رہی ہے۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر