تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوز نور : 11 دسمبر/ مقبوضہ فلسطین میں مظاہرین نے مسئلہ فلسطین کے بارے ميں سعودی عرب کے بادشاہ اور ولیعہد کی غداری اور خیانت کی بھر پور مذمت کرتے ہوئے سعودی عرب کے بادشاہ شاہ سلمان اور ولیعہد محمد بن سلمان کی تصویروں کو آگ لگا کر پاؤں تلے رگڑ دیا ہے۔

نیوز نور : 11 دسمبر/ اسلامی جمہوریہ ایران کی پارلیمنٹ کے اسپیکر نے کہا ہے کہ امریکہ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیل کا دارالحکومت تسلیم کرنے کا اعلان بعض عرب ممالک  کی ہم آہنگی سے انجام پایا ہے جس کا مقصد عرب - اسرائیل کے تعلقات کو معمول پر لانا اور مسئلہ فلسطین کو سرد خانے میں ڈالنا ہے۔

نیوز نور 11 دسمبر/ فلسطینی وزیرخارجہ نےکہا ہے کہ امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی جانب سے بیت المقدس کو اسرائیلی ریاست کا دارالحکومت تسلیم کئے جانے کے بعد اسرائیل دوسرے ممالک  پر القدس کو صہیونی ریاست کا دارالحکومت تسلیم کرانے کے لیے دباؤ ڈال رہا ہے۔

نیوز نور : 11 دسمبر/ سعودی عرب کے قریب سمجھے جانے والے پاکستانی اہلسنت عالم دین اور جمعیت علماء اسلام (س) کے سربراہ  نے کہا ہے کہ اسلامی اتحادی افواج کا ڈھونگ رچانے والا شاہ سلمان اب بیت المقدس کو بچائیں۔

نیوز نور : 11 دسمبر/ امریکی یونیورسٹیوں کے ایک سو بیس یہودی اساتذہ نے ایک شکایت نامے پر دستخط کرکے بیت المقدس کے بارے میں امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے فیصلے کی مذمت کی ہے۔

  فهرست  
   
     
 
    
روسی وزیر خارجہ :
شمالی کوریا کے خلاف امریکی صدر کے دشمنانہ بیانات قابل مذمت ہیں

نیوز نور : روس کے وزیر خارجہ نے شمالی کوریا کے خلاف امریکی صدر کے دشمنانہ بیانات پر تنقیدکرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی صدر کے بیانات قابل مذمت ہیں۔

استکباری دنیا صارفین۲۸۸ : // تفصیل

روسی وزیر خارجہ :

شمالی کوریا کے خلاف امریکی صدر کے دشمنانہ بیانات  قابل مذمت ہیں

نیوز نور : روس کے وزیر خارجہ نے شمالی کوریا کے خلاف امریکی صدر کے دشمنانہ بیانات پر تنقیدکرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکی صدر کے بیانات قابل مذمت ہیں۔

عالمی اردو خبر رساں ادارے ’’نیوز نور‘‘ کی رپورٹ کے مطابق روسی وزیر خارجہ ’’سرگئی لاؤروف‘‘ نے کہا کہ شمالی کوریا کے خلاف امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے بیانات تشویشناک ہیں۔

انہوں نے کہا کہ روس اور چین نے جزیرہ نما‏ئے کوریا میں بحران کم کرنے کے لئے ایک منصوبہ تیار کیا ہے جس کی بنیاد پر شمالی کوریا کو اپنے میزائلی تجربات بند کرنا پڑیں گے اور امریکہ اور جنوبی کوریا کو بھی بڑے پیمانے پر اپنی فوجی مشقیں روکنا ہونگی۔

ادھر جرمنی کے صدر نے بھی جزیرہ نمائے کوریا کے بحران کے پرامن حل کا مطالبہ کیا ہے۔

درایں اثنا  جرمن چانسلر اینجلا مرکل نے جمعہ کے روز کہا کہ جزیرہ نمائے کوریا کے تنازعہ کو فوجی طریقے سے حل نہیں کیا جاسکتا جبکہ محض بیانات سے بھی شمالی کوریا کا مقابلہ کرنا  ناممکن ہے۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر