تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوزنور:یمن کی وزارت صحت نے اعلان کیا ہے کہ  سعودی جارحیت کے سبب ہیضے میں مبتلا افراد کی تعداد آٹھ لاکھ سے زیادہ ہو گئی ہے جس میں اب تک دو ہزار افراد جاں بحق ہو چکے ہیں۔

نیوزنور:اسلامی جمہوریہ ایران کی تشخیص مصلحت نظام کونسل کے سیکریٹری نے کہا ہے کہ ایران میزائلی صلاحیتوں کے بارے میں کوئی مذاکرات نہیں کرے گا۔

نیوزنور:بحرین میں انسانی حقوق اور جمہوریت کے لئے صلح نامی ایک ادارے کے سربراہ نے کہا ہے کہ گذشتہ سات برسوں میں آل خلیفہ حکومت نے پندرہ ہزار بحرینی شہریوں کو گرفتار کر کے جیل میں قید کیا ہے۔

نیوزنور:فرانس کے صدر نے کہا ہے کہ ایٹمی سمجھوتے کو بچانے کے لئے یورپ اپنی تمام تر کوششیں بروئےکار لائے گا۔

نیوزنور: مسجد اقصیٰ کے خطیب نے فلسطینی قوم کے خلاف صہیونی ریاست کے مظالم کی شدید مذمت کرتے ہوئے خبردار کیا ہے کہ القدس شہر کو صہیونی دشمن کی جانب سے منظم جارحیت کاسامنا ہےاس لئے یکجہتی، اتحاد اور اتفاق فلسطینی قوم کے پاس اپنے سلب شدہ حقوق کے حصول کے لیے ایک موثر ہتھیار ہے۔

  فهرست  
   
     
 
    
عبادت کی آڑ میں 20 ہزار یہودی مسجد ابراہیمی میں داخل

نیوز نور : قابض اور ناپاک صہیونی اشرار کی جانب سے فلسطین کی دونوں بڑی مساجد مسجد اقصیٰ اور مسجد ابراہیمی کا تقدس مسلسل پامال کیا جا رہا ہے اور مذہبی رسومات کی ادائیگی اور مذہبی تہوار کی آڑ میں گذشتہ دو روز میں 20 ہزار یہودی شرپسند مسجد ابراہیمی میں داخل ہوئے اور مقدس مقام کی بے حرمتی کی۔

استکباری دنیا صارفین۵۴ : // تفصیل

عبادت کی آڑ میں 20 ہزار یہودی مسجد ابراہیمی میں داخل

نیوز نور : قابض اور ناپاک صہیونی اشرار کی جانب سے فلسطین کی دونوں بڑی مساجد مسجد اقصیٰ اور مسجد ابراہیمی کا تقدس مسلسل پامال کیا جا رہا ہے اور مذہبی رسومات کی ادائیگی اور مذہبی تہوار کی آڑ میں گذشتہ دو روز میں 20 ہزار یہودی شرپسند مسجد ابراہیمی میں داخل ہوئے اور مقدس مقام کی بے حرمتی کی۔

عالمی اردو خبر رساں ادارے ’’نیوز نور‘‘ کی رپورٹ کے مطابق ان دنوں اسرائیل میں یہودیوں کے مذہبی تہوار’عید العرش’(سوکوت) کی 10 روزہ تقریبات منائی جا رہی ہیں اوران تقریبات اور مذہبی رسومات کی آڑ میں غرب اردن کے جنوبی شہر الخلیل میں واقع جامع مسجد ابراہیمی میں ہزاروں یہودیوں کی آمد ورفت کا سلسلہ جاری ہے۔

اسرائیلی ذرائع ابلاغ کے مطابق گذشتہ دو روز کے دوران مذہبی رسومات اور عید کی تقریبات کے لیے 22 ہزار 500 یہودی مسجد ابراہیمی میں داخل ہوئے۔

مقامی فلسطینی ذرائع  نے کہا ہے کہ اسرائیلی بارڈر سیکورٹی فورسز کی جانب سے یہودی شرپسندوں کو مسجد ابراہیمی میں داخلے کے لیے فول پروف سیکورٹی مہیا کی جا رہی ہے۔

فلسطینی شہریوں کا کہنا ہے کہ گذشتہ کئی روز سے اسرائیلی فوج اور پولیس نے مسجد ابراہیمی کا محاصرہ کررکھا ہے اور مسجد میں صرف یہودیوں کو داخلے کی اجازت دی جاتی ہے جبکہ  فلسطینی شہریوں کو مسجد میں اذان اور نماز کی ادائیگی سے مسلسل روکا جا رہا ہے۔

واضح رہے کہ سنہ 1994ء میں اسرائیل نے مسجد ابراہیمی کو مسلمانوں اور یہودیوں کے درمیان زمانی اور مکانی اعتبار سے تقسیم کردیا تھااورمسجد ابراہیمی کی تقسیم کی راہ ہموار کرنے کے لیے ایک یہودی دہشتگرد نے مسجد ابراہیمی میں نماز فجر کے وقت گھس کردرجنوں نمازیوں کو شہید اور زخمی کردیا جس کے بعد مسجد کو بند کردیا گیا۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر