تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوزنور:13 دسمبر/ نائب ایرانی وزیر خارجہ برائے بین الاقوامی امور اور قوانین نے تہران میں مغربی ایشیا کی علاقائی سیکورٹی پر منعقدہ قومی سمینار کے موقع پر صحافیوں کے ساتھ گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ ملکی دفاعی اور میزائل پروگرام پر مذاکرات کی ہرگز گنجائش نہیں ہے ۔

 نیوزنور:13 دسمبر/ اقوام متحدہ کے ایک رکن کا کہنا ہے کہ اس وقت یمن میں 8 ملین انسان سنگین قحط کا شکار ہیں

نیوزنور:13 دسمبر/عراقی حزب اللہ نے اعلان کیا ہے کہ فلسطینی علاقوں کوصیہونی قبضے سے آزاد کرانے کیلئے وہ غاصب  اسرائیل کےساتھ جنگ کو مکمل طورپر آمادہ ہے۔

نیوز نور:13 دسمبر/ مصر ی دارالفتویٰ نے اپنے ایک بیان میں خبردار کیا ہے  کہ قدس کے نام پر داعش جوانوں کو بھرتی کے لیے گمراہ کرسکتی ہے۔

نیوز نور:13 دسمبر/ فلسطین میں انسانی حقوق کے لئے سرگرم ذرائع کا کہنا ہے کہ پچھلے پانچ دنوں کے دوران حراست میں لئے جانے والے بیت المقدس کے باسیوں میں سے ایک تہائی حصہ کم عمر بچوں کا ہے۔

  فهرست  
   
     
 
    
اراکین امریکی کانگریس :
جوہری معاہدے سے علیحدگی ٹرمپ کا خطرناک کھیل ہوگا

نیوز نور : امریکی کانگریس کے بعض اراکین نے حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ ایران جوہری معاہدے کے پابند رہے جبکہ اس سے علیحدگی ڈونالڈ ٹرمپ کی جانب سے خطرناک کھیل ثابت ہوگا۔

استکباری دنیا صارفین۳۰۸ : // تفصیل

اراکین امریکی کانگریس :

جوہری معاہدے سے علیحدگی ٹرمپ کا خطرناک کھیل ہوگا

نیوز نور : امریکی کانگریس کے بعض اراکین نے حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ ایران جوہری معاہدے کے پابند رہے جبکہ اس سے علیحدگی ڈونالڈ ٹرمپ کی جانب سے خطرناک کھیل ثابت ہوگا۔

عالمی اردو خبر رساں ادارے ’’نیوز نور‘‘ کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ روز امریکی کانگریس کی خارجہ امور کمیٹی کی نشست منعقد ہوئی جس میں ایران جوہری معاہدے کا جائزہ لیا گیا اور اکثر شرکا ء نے اس بات پر زور دیا کہ امریکہ کو اس معاہدے پر قائم رہنا چاہئے۔

اراکین کانگریس نے حکومت کو ایران جوہری معاہدے پر قائم نہ رہنے کے حوالے سے خطرناک نتائج پر انتباہ کیا۔

مختلف امریکی شہروں کے اراکین نے ڈونالڈ ٹرمپ کی جانب سے ایران جوہری معاہدے کی ممکنہ عدم توثیق پر اپنے خیالات کا اظہار بھی کیا۔

بعض اراکین نے موجودہ صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی کڑی تنقید کرتے ہوئے اس سے مطالبہ کیا کہ جو خطرناک کھیل شروع کیا ہے اس کا خاتمہ کرے۔

رہوڈ آئی لینڈ، نیو یارک اور ورجینیا کے شہروں سے تعلق رکھنے والے اراکین کانگریس نے کہا کہ صدر ٹرمپ نے جوہری معاہدے کے قصے کو ایک خطرناک کھیل میں بدل دیا ہے جبکہ یہ ایک سنگین معاملہ ہے۔

ایک اور رکن کانگریس ’ڈیوڈ سیسییلین‘ نے کہا کہ بغیر ثبوت ایران پر یہ الزام لگانا کہ وہ جوہری معاہدے کی پاسداری نہیں کررہا ہے  سے امریکی ساکھ کو نقصان پہنچے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس معاملے پر ٹرمپ نے جو واویلا مچایا ہے اس سے ہمارے اتحادیوں کے درمیان بے اعتمادی کی فضا قائم ہوگی۔

ایک اور رکن کانگریس ’ادریانو ایسپالت‘ نے بھی جوہری معاہدے سے نکلنے پر انتباہ کرتے ہوئے کہا کہ اس صورتحال کے بعد شمالی کوریا کے مسئلے کو حل کرنے پر ہمارے اتحادیوں کو اعتماد میں لینا سخت کام ہوگا لہذا امریکہ کو چاہئے کہ وہ اپنے وعدوں پر قائم رہے۔

واضح رہے کہ ٹرمپ انتظامیہ نے 15 اکتوبر کو تیسری بار یہ فیصلہ کرنا ہے کہ کیا امریکہ 2015 میں ایران اور چھہ عالمی طاقتوں کے درمیان طے پانے والے جوہری معاہدے کے حوالے سے ایران کی پاسداری کی تصدیق کرے گی یا نہیں۔تاہم ایسی اطلاعات سامنے آرہی ہیں کہ ڈونالڈ ٹرمپ 15 اکتوبر کو ایران کی پاسداری کی تصدیق کرنے سے گریز کریں گے جس کے بعد امریکی کانگریس ایران کے خلاف نئی پابندیوں کا قانون پاس کرے گی۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر