تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوزنور23فروری/ایک صیہونی روز نامے نےا پنی ایک رپورٹ میں نجباء مقاومتی تنظیم کے سیکریٹری جنرل شیخ اکرم الکعبی کےدورہ لبنان اورحزب‌الله رہنماوں سے ملاقات پرتبصرہ کرتے ہوئے لکھا ہے کہ اسرائیل کے خلاف جنگ میں وہ حزب اللہ کے ہمراہ ہوگی۔

نیوزنور23فروری/بین الاقوامی جوہری توانائی ایجنسی کے ڈائریکٹر نےجوہری معاہدے کے حوالےسےایک بار پھر ایران کی شفاف کارکردگی کی تصدیق کی ہے۔

نیوزنور23فروری/ایمنسٹی انٹرنیشنل نے خبردار کیا ہے کہ سعودی عرب کے ولیعہد اپنے ملک کے شہریوں پر دباؤ بڑھانے اور مخالفین کو کچلنے کے لئے اصلاحات کا پرچم بلند کئے ہوئے ہیں۔

نیوزنور22فروری/اسلامی تحریک مقاومت حماس کے ترجمان نےکہا ہے کہ سلامتی کونسل کے اجلاس میں نیکی ہیلی کے خطاب سے فلسطینی قوم کے تئیں ان کی دشمنی جھلک رہی تھی۔

نیوزنور22فروری/ایک صیہونی عہدے دار نے کہا ہے کہ امریکہ میں ڈونالڈ ٹرمپ کے صدر بننے کے بعد فلسطین میں اسرائیلی ریاست کے مظالم اور توسیع پسندانہ اقدامات کے ساتھ ساتھ بیرون ملک سے یہودیوں کی آمد میں بھی اضافہ ہوگیا ہے۔

  فهرست  
   
     
 
    
اراکین امریکی کانگریس :
جوہری معاہدے سے علیحدگی ٹرمپ کا خطرناک کھیل ہوگا

نیوز نور : امریکی کانگریس کے بعض اراکین نے حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ ایران جوہری معاہدے کے پابند رہے جبکہ اس سے علیحدگی ڈونالڈ ٹرمپ کی جانب سے خطرناک کھیل ثابت ہوگا۔

استکباری دنیا صارفین۳۴۶ : // تفصیل

اراکین امریکی کانگریس :

جوہری معاہدے سے علیحدگی ٹرمپ کا خطرناک کھیل ہوگا

نیوز نور : امریکی کانگریس کے بعض اراکین نے حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ ایران جوہری معاہدے کے پابند رہے جبکہ اس سے علیحدگی ڈونالڈ ٹرمپ کی جانب سے خطرناک کھیل ثابت ہوگا۔

عالمی اردو خبر رساں ادارے ’’نیوز نور‘‘ کی رپورٹ کے مطابق گزشتہ روز امریکی کانگریس کی خارجہ امور کمیٹی کی نشست منعقد ہوئی جس میں ایران جوہری معاہدے کا جائزہ لیا گیا اور اکثر شرکا ء نے اس بات پر زور دیا کہ امریکہ کو اس معاہدے پر قائم رہنا چاہئے۔

اراکین کانگریس نے حکومت کو ایران جوہری معاہدے پر قائم نہ رہنے کے حوالے سے خطرناک نتائج پر انتباہ کیا۔

مختلف امریکی شہروں کے اراکین نے ڈونالڈ ٹرمپ کی جانب سے ایران جوہری معاہدے کی ممکنہ عدم توثیق پر اپنے خیالات کا اظہار بھی کیا۔

بعض اراکین نے موجودہ صدر ڈونالڈ ٹرمپ کی کڑی تنقید کرتے ہوئے اس سے مطالبہ کیا کہ جو خطرناک کھیل شروع کیا ہے اس کا خاتمہ کرے۔

رہوڈ آئی لینڈ، نیو یارک اور ورجینیا کے شہروں سے تعلق رکھنے والے اراکین کانگریس نے کہا کہ صدر ٹرمپ نے جوہری معاہدے کے قصے کو ایک خطرناک کھیل میں بدل دیا ہے جبکہ یہ ایک سنگین معاملہ ہے۔

ایک اور رکن کانگریس ’ڈیوڈ سیسییلین‘ نے کہا کہ بغیر ثبوت ایران پر یہ الزام لگانا کہ وہ جوہری معاہدے کی پاسداری نہیں کررہا ہے  سے امریکی ساکھ کو نقصان پہنچے گا۔

انہوں نے مزید کہا کہ اس معاملے پر ٹرمپ نے جو واویلا مچایا ہے اس سے ہمارے اتحادیوں کے درمیان بے اعتمادی کی فضا قائم ہوگی۔

ایک اور رکن کانگریس ’ادریانو ایسپالت‘ نے بھی جوہری معاہدے سے نکلنے پر انتباہ کرتے ہوئے کہا کہ اس صورتحال کے بعد شمالی کوریا کے مسئلے کو حل کرنے پر ہمارے اتحادیوں کو اعتماد میں لینا سخت کام ہوگا لہذا امریکہ کو چاہئے کہ وہ اپنے وعدوں پر قائم رہے۔

واضح رہے کہ ٹرمپ انتظامیہ نے 15 اکتوبر کو تیسری بار یہ فیصلہ کرنا ہے کہ کیا امریکہ 2015 میں ایران اور چھہ عالمی طاقتوں کے درمیان طے پانے والے جوہری معاہدے کے حوالے سے ایران کی پاسداری کی تصدیق کرے گی یا نہیں۔تاہم ایسی اطلاعات سامنے آرہی ہیں کہ ڈونالڈ ٹرمپ 15 اکتوبر کو ایران کی پاسداری کی تصدیق کرنے سے گریز کریں گے جس کے بعد امریکی کانگریس ایران کے خلاف نئی پابندیوں کا قانون پاس کرے گی۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر