تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوزنور21اپریل/لبنانی پارلیمنٹ کے اسپیکر اور مشہور تجزیہ کار نے اس بات پر زور دیا ہے کہ عربی ممالک کی اپنے پڑوسیوں کے ساتھ بات چیت بالخصوص اسلامی جمہوریہ ایران اور سعودی عرب کے درمیان مذاکرات وقت کی اہم ضرورت ہیں۔

نیوزنور21اپریل/شیخ الازهر مصر نے تاریخ اسلام کا جائزہ لیتے ہوئے کہا ہےکہ قدس اسلامی ـ عربی سرزمین ہے اور ہمیشہ اسلامی سرزمین  کے طور پرباقی رہے گی۔

نیوزنور21اپریل/سرزمین عراق کےایک معروف عالم دین نے کہا ہےکہ عرب لیگ میں فلسطین کے دفاع اور وہاں کے موجودہ حالات کو بدلنے کی توانائی موجود نہیں ہے ۔

نیوزنور21اپریل/حزب الله لبنان کی ایگزیٹو کونسل کے نائب صدر نے عرب ممالک کی فوج کو شام میں داخل ہونے کے حوالہ سے کئے جانے والے ہرقسم کے فیصلہ کے سلسلے میں منتبہ کرتے ہوئے اسے ایک قسم کا تجاوز قرار دیا ہے ۔

نیوزنور21اپریل/بحرین کی سکیورٹی فورسز نے اپنے تازہ ترین اقدام میں بحرین کے روحانی رہنماء کے گھر کے اطراف میں خاردار تاروں کی باڑ لگا دی ہے۔

  فهرست  
   
     
 
    
مشرق وسطیٰ امور کے امریکی ماہر:
شام میں امریکی اور ترک افواج کے درمیان تصادم کے امکانات خطرناک حد تک بڑھ گئے ہیں

نیوزنور09 فروری/مشرق وسطیٰ امور کے ایک امریکی ماہر نے شام کےا سٹریٹجک شہر عفرین پر ترکی کی فوجی جارحیت کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ  اس جنگ زدہ ملک میں ترک اورامریکی افواج کے درمیان ممکنہ تصادم  کے امکانات  خطرناک حد تک بڑھ گئے ہیں ۔

استکباری دنیا صارفین۲۵۴ : // تفصیل

مشرق وسطیٰ امور کے امریکی ماہر:

شام میں امریکی اور ترک افواج کے درمیان تصادم کے امکانات خطرناک حد تک بڑھ گئے ہیں

نیوزنور09 فروری/مشرق وسطیٰ امور کے ایک امریکی ماہر نے شام کےا سٹریٹجک شہر عفرین پر ترکی کی فوجی جارحیت کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ  اس جنگ زدہ ملک میں ترک اورامریکی افواج کے درمیان ممکنہ تصادم  کے امکانات  خطرناک حد تک بڑھ گئے ہیں ۔

عالمی اردوخبررساں ادارے’’نیوز نور‘‘ کی رپورٹ کے مطابقایک انٹرویو میں ’’اینی مرداسوف‘‘نےشام کےا سٹریٹجک شہر عفرین پر ترکی کی فوجی جارحیت کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ  اس جنگ زدہ ملک میں ترک اورامریکی افواج کے درمیان ممکنہ تصادم  کے امکانات  خطرناک حد تک بڑھ گئے ہیں ۔

انہوں نے کہاکہ  عفرین کے بعد منبیج شہر میں ترکی کاممکنہ آپریشن پورے علاقے کی سلامتی کیلئے  خطرہ ہے ۔

انہوں نے کہاکہ اسٹریٹجک اہمیت کا حامل منبیج شہر  کا اس وقت  عرب قبائل کا کنٹرول ہے  اور اردغان نے اس شہر  میں فوجی کاروائی کی طرف اشارہ دیکر  ان قبائل کے خلاف جنگ کا اعلان کردیا ہے۔

انہوں نے کہاکہ منبیج شہر شامی تنازعے میں ملوث  فریقین کیلئے انتہائی اہمیت کا حامل ہے واشنگٹن  حکام یقینی طورپر اس علاقے   میں اپنی موجودگی برقراررکھنے کی کوشش کریں گے ۔

انہوں نےکہاکہ اس شہر کو  کنٹرول میں لینے کی کوششوں کےدوران ممکنہ طورپر  ترک افواج کا امریکی فوجیوں کے درمیان تصادم ہوگا ۔

موصوف تجزیہ نگار نےمزیدعفرین کے بعد منبیج میں فوجی آپریشن شروع کرنے کے ترکی کے منصوبے پر  امریکہ کے انتباہ کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہاکہ اس اسٹریٹجک شہر پرکسی بھی طرح کی جارحیت کی اردغان حکومت کو بھاری قیمت چکانی پڑ سکتی ہے۔

واضح رہے کہ شمالی شام کے اسٹریٹجک شہر عفرین  پر ترکی کی افواج نے  20 جنوری کو آپریشن کا آغاز کیاتھا جس کی دمشق حکومت نے مذمت کرتے ہوئے  اسے ملک کی ارضی سالمیت کی خلاف ورزی قراردیا   ۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر