تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوز نور 23 اپریل/ بحرین کے ایک ممتاز شیعہ عالم دین نے اس بات کےساتھ کہ آل خلیفہ  رژیم کےسامنے فلسطینی کاز کی کوئی اہمیت نہیں ہے کہا ہے کہ بحرینی عوام  اپنے تمام جائز مطالبات پورے ہونے تک اپنی تحریک جاری رکھیں گے۔

نیوزنور23اپریل/روسی وزارت خارجہ کی ترجمان نے کہا ہے کہ مغربی ممالک شام کے شہر دوما میں کیمیائی حملے سے متعلق حقائق میں تحریف کر رہے ہیں۔

نیوزنور23اپریل/ٹوئٹر پرسعودی عرب کے  سرگرم  اور شاہی خاندان کے قریبی کارکن نےسعودی عرب کے دارالحکومت ریاض میں شاہی محل میں کل رات ہونے والی فائرنگ کی اصل حقیقت سامنے لاتے ہوئے کہا ہے کہ فائرنگ کے واقعہ میں آل سعود کے بعض اعلٰی شہزادے ملوث ہیں ڈرون کو گرانے کا واقعہ سعودی حکومت کا ڈرامہ ہے فائرنگ کے واقعہ کے بعد سعودی بادشاہ اور ولیعہد شاہی محل سے فرار ہوگئے تھے۔

نیوزنور23اپریل/اسلامی مقاومتی محورحزب اللہ لبنان کے سربراہ نے کہا ہےکہ اسرائيل کو لبنانیوں کے خلاف جارحیت سے روکنا ہمارا سب سے بڑا ہدف ہے ۔

نیوزنور23اپریل/مجلس وحدت مسلمین پاکستان سندھ کے سیکرٹری جنرل نے کہا  ہے کہ امام حسینؑ نے ۱۴ سو سال قبل ان دہشتگردوں کو شکست دی جو دین اسلام کا لبادہ اوڑھ کر دین کو اپنی پسند نا پسند میں ڈھال رہے تھے۔

  فهرست  
   
     
 
    
حماس کے سینئر رکن:
محصورین غزہ کے صبرکا پیمانہ لبریز ہوچکاہے

نیوزنور09فروری/اسلامی تحریک مقاو مت حماس کے سیاسی شعبے کے سینئر رکن نے کہا ہے کہ غزہ کے دو ملین محصورین کے صبر کاپیمانہ لبریز ہوچکااور اہالیان غزہ کا بپھرا سمندر کسی بھی نکل سکتا ہےاور اگر عوام اٹھ کھڑے ہوئے تو صہیونی ریاست کی طرف سے کھڑی کی گئی رکاوٹیں، دیواریں اور باڑیں ہوا میں اڑا دی جائیں گی۔

اسلامی بیداری صارفین۲۴۸ : // تفصیل

حماس کے سینئر رکن:

محصورین غزہ کے صبرکا پیمانہ لبریز ہوچکاہے

نیوزنور09فروری/اسلامی تحریک مقاو مت حماس کے سیاسی شعبے کے سینئر رکن نے کہا ہے کہ غزہ کے دو ملین محصورین کے صبر کاپیمانہ لبریز ہوچکااور اہالیان غزہ کا بپھرا سمندر کسی بھی نکل سکتا ہےاور اگر عوام اٹھ کھڑے ہوئے تو صہیونی ریاست کی طرف سے کھڑی کی گئی رکاوٹیں، دیواریں اور باڑیں ہوا میں اڑا دی جائیں گی۔

عالمی اردو خبررساں ادارے’’نیوزنور‘‘کی رپورٹ کے مطابق اپنے ایک بیان میں’’ ڈاکٹر موسیٰ ابو مرزوق‘‘ نے کہا کہ صہیونی ریاست نے کئی سال سے غزہ کے عوام کا محاصرہ کرکے ان کی زندگی اجیرن بنا رکھی ہے اوراس ناکہ بندی کا مقصد غزہ کے عوام کو اپنے سامنے جھکنے پر مجبور کرنا ہے مگر محصورین غزہ نے صہیونی دشمن کے سامنے نہ جھکنے کا عزم کر رکھا ہے۔

انہوں  نے کہا کہ عارضی سرحد غزہ کے عوام کے سامنے رکاوٹ نہیں بن سکتی کیونکہ  غزہ کے عوام کے سامنے جنگ اور امن دونوں راستے موجود ہیں۔

موصوف سینئر رکن نے کہا کہ  اگرانہیں جنگ پر مجبور کیا گیا تو وہ اپنے آس پاس کھڑی کی گئی صہیونی ریاست کی تمام رکاوٹیں توڑ کرآگے بڑھنا شروع ہوں گے۔

قابل ذکر ہے کہ فلسطین میں سیاسی، سماجی اور انسانی حقوق کی تنظیموں نے غزہ پٹی میں عظیم الشان واپسی مارچ کی تیاریاں شروع کی ہیں اس مارچ کا مقصد فلسطینی پناہ گزینوں کے حق واپسی کو تازہ کرنا اور عالمی برادری کو لاکھوں فلسطینیوں کے سلب شدہ حقوق واپس کرنے کے لیے تیار کرنا ہے۔ واضح رہے کہ اس ضمن میں سب سے بڑا جلوس غزہ پٹی میں نکالا جائے گاغزہ میں لاکھوں افراد اس میں حصہ لیں گےاور یہ جلوس غزہ کی سنہ 1948ء کی جنگ میں کھینچی گئی نام نہاد گرین لائن کی طرف مارچ کرے گا۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر