تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوزنور22فروری/اسلامی تحریک مقاومت حماس کے ترجمان نےکہا ہے کہ سلامتی کونسل کے اجلاس میں نیکی ہیلی کے خطاب سے فلسطینی قوم کے تئیں ان کی دشمنی جھلک رہی تھی۔

نیوزنور22فروری/ایک صیہونی عہدے دار نے کہا ہے کہ امریکہ میں ڈونالڈ ٹرمپ کے صدر بننے کے بعد فلسطین میں اسرائیلی ریاست کے مظالم اور توسیع پسندانہ اقدامات کے ساتھ ساتھ بیرون ملک سے یہودیوں کی آمد میں بھی اضافہ ہوگیا ہے۔

نیوزنور22فروری/اقوام متحدہ میں تعینات روسی مندوب اقوام متحدہ میں ایران مخالف امریکی قرارداد کی کڑی الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے اسے جھوٹ کا پلندہ قراردیا ہے ۔

نیوزنور22فروری/تحریک اُمت لبنان کے سیکرٹری جنرل نے کہا ہے کہ عراق کے تمام طبقات کے درمیان وحدت نے اس ملک کی تقسیم کی سازش کو ناکام بنا دیا ہے اور اس وقت جو کچھ بھی عالم اسلام اور عرب دنیا میں ہورہا ہے اسکا اصلی ہدف فلسطین کے مسئلے کو فراموش کروایا جانا ہے۔

نیوزنور22فروری/جماعت اسلامی پاکستان کے مزکزی امیر نے کہا ہے کہ معاشرے میں دین کی دوری کی وجہ سے ماں باپ، اساتذہ اور بڑوں کی عزت نہیں کی جاتی ہے معاشرے میں عدم برداشت کے رویہ کے خاتمے کیلئے علماء کرام، محراب و منبر سے اسلام کی صحیح تعلیمات کو عام کریں کیونکہ اسلام انسانیت کا درس دیتا ہے اور انسانی حرمت کے تقاضے بھی بڑے واضع ہیں اور دین کو صحیح معنوں میں اپنی زندگیوں کا نصب العین بنائے بغیر معاشرتی برائیوں کو کنٹرول نہیں کیا جا سکتا۔

  فهرست  
   
     
 
    
امریکی کارکن:
صہیونی طیارہ کو مار گرانا امریکی پالیسی کی شکست ہے

نیوزنور14فروری/امریکی اینٹی وار تنظیم کے کارکن نے القدس کے خلاف ٹرمپ کے صہیونی نواز فیصلے پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ شام کی جانب سے صہیونی جنگی طیارے کو مار گرائے جانے سے امریکی پالیسی کی شکست ظاہر ہوتی ہے۔

استکباری دنیا صارفین۵۸ : // تفصیل

امریکی کارکن:

صہیونی طیارہ کو مار گرانا امریکی پالیسی کی شکست ہے

نیوزنور14فروری/امریکی اینٹی وار تنظیم کے کارکن نے القدس کے خلاف ٹرمپ کے صہیونی نواز فیصلے پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ شام کی جانب سے صہیونی جنگی طیارے کو مار گرائے جانے سے امریکی پالیسی کی شکست ظاہر ہوتی ہے۔

عالمی اردو خبررساں ادارے’’نیوزنور‘‘کی رپورٹ کے مطابق جنگ کے خلاف امریکی نیشنل الائنس گروپ کے رکن ’’جو لومبارڈو‘‘ نےایرانی ذرایع ابلاغ کے ساتھ انٹریو میں القدس کے خلاف ٹرمپ کے صہیونی نواز فیصلے پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ شام کی جانب سے صہیونی جنگی طیارے کو مار گرائے جانے سے امریکی پالیسی کی شکست ظاہر ہوتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ امریکی سفارتخانے کو القدس منتقل کرنے کے ٹرمپ کے فیصلے کے بعد صہیونیوں کی جارحانہ کاروائیوں میں شدت آگئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ امریکی پالیسی خطے میں جنگوں میں اضافے کرنے پر مبنی ہے تاہم شام میں صہیونی طیارے کی تباہی کے بعد امریکہ کہ اس پالیسی کو بھی ناکامی کا سامنا ہوا ہے۔

امریکی کارکن کا کہنا ہے کہ امریکہ شام کو تقسیم کرنے کی سوچ میں ہےاور وہاں امریکی فوج بھیجنے کا مقصد بھی یہی ہے کہ شام کو تقیسم کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ امریکی انتظامیہ شام میں کیمیائی ہتھیاروں کی موجودگی پر شوشا چھوڑ کر عالمی رائے عامہ کو گمراہ کرنے کی خواہاں ہے تاہم امریکی وزیر دفاع کو اس حقیقت کا ادراک ہوچکا ہے کہ شام میں کیمیائی ہتھیار دہشتگردوں کے پاس موجود ہیں۔

موصوف کارکن نے کہا کہ شامی مسلح افواج نے صہیونی ایف-16 طیارے کو گرا کر اپنی سرزمین کا بھرپور دفاع کیا ہے۔

جو لومبارڈو نے مزید کہا کہ شامی حکومت نے دباؤ، فوجی جارحیت اور پابندیوں کے باوجود ثابت کردیا کہ وہ مستحکم ہے اور اس کے اکثریتی عوام بھی حکومت کے ساتھ کھڑے ہیں۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر