تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوز نور 23 اپریل/ بحرین کے ایک ممتاز شیعہ عالم دین نے اس بات کےساتھ کہ آل خلیفہ  رژیم کےسامنے فلسطینی کاز کی کوئی اہمیت نہیں ہے کہا ہے کہ بحرینی عوام  اپنے تمام جائز مطالبات پورے ہونے تک اپنی تحریک جاری رکھیں گے۔

نیوزنور23اپریل/روسی وزارت خارجہ کی ترجمان نے کہا ہے کہ مغربی ممالک شام کے شہر دوما میں کیمیائی حملے سے متعلق حقائق میں تحریف کر رہے ہیں۔

نیوزنور23اپریل/ٹوئٹر پرسعودی عرب کے  سرگرم  اور شاہی خاندان کے قریبی کارکن نےسعودی عرب کے دارالحکومت ریاض میں شاہی محل میں کل رات ہونے والی فائرنگ کی اصل حقیقت سامنے لاتے ہوئے کہا ہے کہ فائرنگ کے واقعہ میں آل سعود کے بعض اعلٰی شہزادے ملوث ہیں ڈرون کو گرانے کا واقعہ سعودی حکومت کا ڈرامہ ہے فائرنگ کے واقعہ کے بعد سعودی بادشاہ اور ولیعہد شاہی محل سے فرار ہوگئے تھے۔

نیوزنور23اپریل/اسلامی مقاومتی محورحزب اللہ لبنان کے سربراہ نے کہا ہےکہ اسرائيل کو لبنانیوں کے خلاف جارحیت سے روکنا ہمارا سب سے بڑا ہدف ہے ۔

نیوزنور23اپریل/مجلس وحدت مسلمین پاکستان سندھ کے سیکرٹری جنرل نے کہا  ہے کہ امام حسینؑ نے ۱۴ سو سال قبل ان دہشتگردوں کو شکست دی جو دین اسلام کا لبادہ اوڑھ کر دین کو اپنی پسند نا پسند میں ڈھال رہے تھے۔

  فهرست  
   
     
 
    
شامی مندوب:
مغرب شامی جنگ کے خاتمے کا خواہاں نہیں ہے

 نیوزنور11اپریل/اقوام متحدہ میں تعینات شام کے مستقل مندوب نے کہا ہے کہ مغرب بشمول امریکہ، برطانیہ اور فرانس نہیں چاہتے ہیں کہ شام میں جنگ کا خاتمہ ہو۔

استکباری دنیا صارفین۱۸۱ : // تفصیل

شامی مندوب:

مغرب شامی جنگ کے خاتمے کا خواہاں نہیں ہے

 نیوزنور11اپریل/اقوام متحدہ میں تعینات شام کے مستقل مندوب نے کہا ہے کہ مغرب بشمول امریکہ، برطانیہ اور فرانس نہیں چاہتے ہیں کہ شام میں جنگ کا خاتمہ ہو۔

عالمی اردو خبررساں ادارے’’نیوزنور‘‘کی رپورٹ کے مطابق اقوام متحدہ میں تعئنات شام کے مستقل مندوب’’بشار الجعفری‘‘ نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مغرب بشمول امریکہ، برطانیہ اور فرانس نہیں چاہتے ہیں کہ شام میں جنگ کا خاتمہ ہو۔

نشست کے دوران خاتون امریکی مندوب نے احتجاج کے طور پر واک آوٹ کردیا جس کے ردعمل میں شامی مندوب نے کہا کہ امریکی مندوب کو ڈر ہے کہ وہ نظریے کے لحاظ سے مجھ سے شکست نہ کھا جائے۔

شامی مندوب نے کہا کہ مغربی ممالک اپنی مخالفت سے متعلق نظرئے کو تسلیم نہیں کرنا چاہتے. آج جو نمائندے کیمیائی ہتھیاروں کی روک تھام کے قوانین کی دہجیاں اڑانے پر واویلا کرتے ہیں کیا ان کو تاریخ کاپتہ نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ سعودی عرب کی جانب سے اربوں ڈالر کے حساب سے ہتھیاروں کی خریداری کا مقصد یمن میں مظلوم عوام کے قتل عام میں اضافہ کرنا اور شام کے خلاف نئی جنگ کا محاذ کھولنا ہے۔

انہوں نے کہا کہ در اصل مغربی ممالک سے مہلک ہتھیاروں کی روک تھام کے قوانین کی دہجیاں اڑانے کا عمل شروع ہوا لیکن امریکہ نے جاپان اور ویت نام میں کیمیائی اور حیاتیاتی ہتھیاروں کا استعمال کیا تھا۔

انہوں نے برطانیہ اور فرانس کو دہرے معیار اپنانے پر آڑے ہاتھوں لیتے ہوئے کہا کہ روس پر بے جا تنقید اور شک سمجھ سے بالاتر ہے جبکہ روسی رفقائے کار مخلص انداز میں ہمارے ساتھ تعاون کررہے ہیں۔

موصوف شامی عہدے دار نے سلامتی کونسل پر زور دیا کہ وہ ایسے جھوٹے الزامات اور منصوبوں کے خلاف ڈٹا رہے تاہم امریکہ، برطانیہ اور فرانس سلامتی کونسل پر دباؤ ڈال رہے ہیں جن کا مقصد اپنی خواہشات کو منوانا ہے مگر عالمی برادری اور حریت پسند اقوام اس پر فیصلہ کریں۔

بشار الاجعفری نے مزید کہا  کہ شام سلامتی کونسل کے مستقل اور عارضی رکن ممالک کو ہرگز یہ اجازت نہیں دے گا کہ جو انہوں نے عراق اور لیبیا کے ساتھ کیا وہ ہمارے ساتھ کریں۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر