تازہ ترین خبریں  
 
 
  تازہ ترین مقالات  
 
 
  مقالات  
 
 
  پیوندها  
   

نیوزنور21مئی/عراق میں الصادقون سیاسی تحریک کے ایک سرگرم کارکن نے اس بات پر انتباہ کیا ہے کہ ہمارے ملک میں اسلامی جمہوریہ ایران کی مداخلت کا دعوی امریکہ کی ایک سازش ہے۔

نیوزنور21مئی/روس سے تعلق رکھنے والے ایک عیسائی راہب نے کہا ہے کہ  دنیا کے تمام مذہبی رہنماؤں من جملہ ویٹیکن کے پاپ کو چاہئے کہ مقبوضہ فلسطین میں ہونے والے قتل عام پر آواز بلند کریں۔

نیوزنور21مئی/تحریک انصاف پاکستان کے مرکزی رہنما نے کہا ہے کہ فلسطینیوں پر اسرائیلی فوج کی اندھادھند فائرنگ سے ہزاروں افراد کی شہات عالمی برادری کی بے حسی کا منہ بولتا ثبوت اور امن کے علمبردار ممالک، این جی اوز کے منہ پرزوردار تھپڑ ہے۔

نیوزنور21مئی/حزب اللہ لبنان کی مرکزی کونسل کے رکن نے سعودی عرب کی امریکہ اور اسرائیل کے ساتھ ملکر اسلام اور مسلمانوں کے خلاف آشکارا اور پنہاں سازشوں کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب میں حزب اللہ لبنان کو لبنانی حکومت میں شامل ہونے سے روکنے کی ہمت نہیں ہے۔

نیوزنور21مئی/ملائیشیائی اسلامی تنظیم کی مشاورتی کونسل کے صدر نے کہا ہے کہ فلسطین میں نہتے شہریوں پر صہیونی حکومت کی جانب سے ڈھائے جانے والے مظالم کو روکنا ہو گا۔

  فهرست  
   
     
 
    
شفقنا انسٹی ٹیوٹ کی ڈائریکٹر:
ایران مداخلت نہ کرتا تو پور ے شام پر تکفیری گروہوں کا قبضہ ہوتا

نیوز نور 09 مئی/مشرق وسطیٰ امور کی برطانوی ماہر اورشفقنا انسٹی ٹیوٹ کی ڈائریکٹر نے اسلامی جمہوریہ ایران اورتحریک مقاومت حزب اللہ  کے خلاف صیہونی حکومت کی جارحانہ پالیسیوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر اسلامی جمہوریہ  شام میں مداخلت نہ کرتا تو آج  اس عرب ملک کے تمام علاقوں پر تکفیری گروہوں کا قبضہ ہوتا ۔

استکباری دنیا صارفین۷۰ : // تفصیل

شفقنا انسٹی ٹیوٹ کی ڈائریکٹر:

ایران مداخلت نہ کرتا تو پور ے شام پر تکفیری گروہوں کا قبضہ ہوتا 

نیوز نور 09 مئی/مشرق وسطیٰ امور کی برطانوی ماہر اورشفقنا انسٹی ٹیوٹ کی ڈائریکٹر نے اسلامی جمہوریہ ایران اورتحریک مقاومت حزب اللہ  کے خلاف صیہونی حکومت کی جارحانہ پالیسیوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر اسلامی جمہوریہ  شام میں مداخلت نہ کرتا تو آج  اس عرب ملک کے تمام علاقوں پر تکفیری گروہوں کا قبضہ ہوتا ۔

 عالمی اردوخبررساں ادارے’’نیوز نور‘‘کی رپورٹ کے مطابق روسی ذرائع ابلاغ کےساتھ انٹرویو میں ’’کیتھرین شاکڈم ‘‘نے اسلامی جمہوریہ ایران اورتحریک مقاومت حزب اللہ  کے خلاف صیہونی حکومت کی جارحانہ پالیسیوں کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اگر اسلامی جمہوریہ  شام میں مداخلت نہ کرتا تو آج  اس عرب ملک کے تمام علاقوں پر تکفیری گروہوں کا قبضہ ہوتا ۔

انہوں نے کہاکہ صیہونی حکومت  جان بوجھ کر علاقے میں اس اُمید میں کشیدگی کو ہوا دے رہی ہے کہ امریکہ  اسلامی جمہوریہ ایران کے خلاف کسی نہ کسی طرح کی فوجی کاروائی یا اس کے خلاف پابندیاں عائد کرے۔

انہوں نے اسلامی جمہوریہ  کے خلاف صیہونی وزیر اعظم نیتن یاہو کے حالیہ الزامات کو مسترد کرتے ہوئے کہاکہ ایران کے دشمن  عالمی برادری کو گمراہ کرکے  یہ باوار کرانا چاہتے ہیں کہ علاقے میں تمام مسائل کا ذمہ دار ایران ہے  جبکہ  حقیقت اس کے برعکس ہے اسلامی جمہوریہ ایران کبھی بھی جنگ کا حامی نہیں رہا  ہے بلکہ اس کی پالیسی ہمیشہ علاقے میں امن واستحکام کے قیام پر مبنی رہی ہے ۔

انہوں نے کہاکہ اسلامی جمہوریہ ایران نے اپنی 100 سالہ یا 003 سالہ تاریخ میں آج تک کسی بھی ملک پر جارحیت نہیں کی ۔

انہوں نے کہاکہ اس کے برعکس علاقائی ممالک کی خودمختاری  اورارضی سالمیت کی خلاف ورزی کرنا اسرائیل کا ریکارڈ ہے جس کی واضح مثال لبنان ،شام اورغزہ ہے۔

انہوں نے مزیدکہاکہ بلاشبہ اگر اسلامی جمہوریہ ایران میں شام میں مداخلت نہ کرتا تو آج شام پر داعش ،جبہت النصرہ یا اور کسی دہشتگرد گروہ کا قبضہ ہوتا ۔


آپ کی رائے
نام:  
ایمیل:
پیغام:  500
 
. « »
قدرت گرفته از سایت ساز سحر