my title page contents
استکباری دنیا
شماره : 47299
: //
ایرانی سیاسی مبصر:
کردستان ریفرنڈم کے حوالے سے ایران کو ایک آزاد پالیسی اپنانی چاہئے

نیوزنور: اسلامی جمہوریہ ایران کے ایک سیاسی مبصر نے کاکہنا ہےکہ  انقرہ اورتہران کردستان ریفرنڈم کے حوالے سے ایک یکسان پالیسی  کا تعاقب نہیں کرسکتے  اورایران کو  اس حوالے سے  ایک آزاد پالیسی  اپنانے کی ضرورت ہے۔

ایرانی سیاسی مبصر:

کردستان ریفرنڈم کے حوالے سے ایران کو ایک آزاد پالیسی اپنانی چاہئے

نیوزنور: اسلامی جمہوریہ ایران کے ایک سیاسی مبصر نے کاکہنا ہےکہ  انقرہ اورتہران کردستان ریفرنڈم کے حوالے سے ایک یکسان پالیسی  کا تعاقب نہیں کرسکتے  اورایران کو  اس حوالے سے  ایک آزاد پالیسی  اپنانے کی ضرورت ہے۔

عالمی اردوخبررساں ادارے’’نیوزنور‘‘کی رپورٹ کے مطابق مقامی میڈیا کےساتھ انٹرویو میں ’’محمد مسجد ‘‘نےکہاکہ انقرہ اورتہران کردستان ریفرنڈم کے حوالے سے ایک یکسان پالیسی  کا تعاقب نہیں کرسکتے  اورایران کو  اس حوالے سے  ایک آزاد پالیسی  اپنانے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے  عراقی کردستان میں حالیہ کردستان  ریفرنڈم کے بارے میں کہاکہ اس ریفرنڈم کوایسے وقت میں انجام دیاگیا جب اس کے نتائج کسی بھی صورت میں علاقائی ممالک یورپ اوردنیا کو قبول نہیں ہیں۔

موصوف مبصر نے کہا کہ سویت یونین کے بکھرنے کے بعد بہت سی نئی ریاستوں کا وجود عمل میں آیا اوریوگوسلوایہ ان سے علحٰیدہ ہوگیا لیکن مشرق وسطیٰ کی ابھی کی صورتحال  اس زمانے سے مختلف ہے ۔

انہوں نے کہاکہ سویت بلاک کو بکھرنے کی غرض سے مغربی استعماری طاقتوں نے آزادی پسند  تحریکوں کی حمایت کی تاہم یہ صورتحال یوگوسلوایہ  میں مختلف تھی۔

اس سوال کے جواب میں کہ عراقی کردستان میں حالیہ ریفرنڈم کو کٹا لونیا ریفرنڈم سے موازانہ کیاجاسکتا ہے انہوں نے کہاکہ اس وقت عملی طورپر  یورپ میں کٹا لونیا اوراسکاٹ لینڈ میں آزادی کی تحریکیں فعال ہیں تاہم یورپی یونین کا کہنا ہےکہ  وہ اقلیتوں کے حقوق کے دفاع میں پرعزم ہیں لیکن  کسی بھی ملک کے صوبے کے یکطرفہ فیصلے کی مخالف ہے۔

انہوں نے کہاکہ اس حقیقت کے باوجود کہ یورپی یونین نے کٹولونیا کی آزادی پسند عوام پر  اسپین پولیس کےبدترین تشدد کے مذمت کی تاہم انہوں نے حالیہ ریفرنڈم کو  غیر قانونی قراردیا جو اسپانوی حکومت کی مرضی کے خلاف انجام پایا ۔

©newsnoor.com2012 . all rights reserved
خبریں،مراسلات،مقالات،مکالمے،مسلکی رواداری،اتحاد،تقریب،دینی رواداری،اسلامی بیداری،عالم استکبار،ادھر ادھر