نیوزنور newsnoor

نیوزنور بین الاقوامی تحلیلی اردو خبررساں ادارہ

نیوزنور newsnoor

نیوزنور بین الاقوامی تحلیلی اردو خبررساں ادارہ

نیوزنور newsnoor
موضوعات
تازہ ترین تبصرے
  • ۱۷ اکتبر ۱۸، ۲۲:۱۵ - امیرحسین
    ((:


مصری روزنامہ:

نیوزنور ۱۰ نومبر:مصر کےایک  مشہور روزنامے نے  امریکی ایران مخالف پابندیوں اور الزامات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے لکھا ہےکہ ایرانی تیل کی برآمدات کو صفر تک لےجانے  کا امریکی خواب  کبھی بھی شرمندہ تعبیر نہیں ہوپائےگا۔

عالمی اردوخبررساں ادارے’’نیوزنور‘‘کی رپورٹ کے مطابق روزنامہ الوطن  نے تجزیہ کار حسن ابوطالب کے ایک مضمون کو  شائع کیا ہےجس میں انہوں نے امریکہ کی ایران مخالف پابندیوں اور الزامات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے لکھا کہ ایرانی تیل کی برآمدات کو صفر تک لےجانے  کا امریکی خواب  کبھی بھی شرمندہ تعبیر نہیں ہوپائےگا۔

روزنامہ نے لکھا کہ امریکہ کی ایران مخالف پابندیوں کا مقصد  ایران کی معیشت کو کمزور  اور ایرانی عوام کے زندگی معیار کو درہم برہم کرنا ہے۔

انہوں نے کہاکہ امریکہ کو لگتاتھا کہ وہ اسلامی جمہوریہ ایران پرپابندیاں عائد کرکے عوام کو حکومتی نظام کےخلاف  مشتعل کردےگا تاہم امریکہ کو  یہاں بھی شکست کا منھ دیکھنا پڑا ہے۔

انہوں نے کہاکہ امریکہ کی ایران مخالف پابندیاں ہرگز کامیاب ہونے والی نہیں ہیں کیونکہ ایرانی قوم  میں  ان ظالمانہ پابندیوں کا صحیح طریقے سے مقابلہ کرنےکا دہائیوں کا تجربہ ہے۔

انہوں نے لکھا کہ  ماضی کی طرح اسلامی جمہوریہ ایران  آئندہ بھی  امریکہ کو شکست سے دوچار کردےگا۔

ادھر امریکی صدر ٹرمپ نے ایران مخالف پابندیوں کی شکست پر پردہ ڈالنے کی کوشش کرتے ہوئے کہا ہے کہ وہ تیل کی عالمی منڈیوں میں قیمتوں کو کم رکھنے کی غرض سے ایران کے تیل پر بتدریج پابندیاں عائد کریں گے۔

واضح رہے کہ امریکہ نے واضح طور پر پسپائی اختیار کرتے ہوئے آٹھ ملکوں کو ایران سے تیل خریدنے کے لئے مستثنی کر دیا ہے - ایٹمی معاہدے سے امریکہ کے نکل جانے کے بعد بھی اس معاہدے پر دستخط کرنے والے دیگر ملکوں برطانیہ ، فرانس، جرمنی، چین اور روس نے اعلان کیا ہے کہ وہ ایٹمی معاہدے میں باقی رہیں گے اور ایران کے ساتھ تجارت کرتے رہیں گے اور ایرانی تیل بھی خریدتے رہیں گے۔

نظرات  (۰)

ابھی تک کوئی تبصرہ نہیں لکھا گیا ہے
ارسال نظر آزاد است، اما اگر قبلا در بیان ثبت نام کرده اید می توانید ابتدا وارد شوید.
شما میتوانید از این تگهای html استفاده کنید:
<b> یا <strong>، <em> یا <i>، <u>، <strike> یا <s>، <sup>، <sub>، <blockquote>، <code>، <pre>، <hr>، <br>، <p>، <a href="" title="">، <span style="">، <div align="">
تجدید کد امنیتی